ہم دشمن نہیں ہیں،اودھو ٹھاکرے کو ملاقات کاعلم تھا:سنجے راوت

نئی دہلی:مہاراشٹرکے سابق وزیراعلیٰ دیویندر فڑنویس اور شیوسینا لیڈر سنجے راوت نے ملاقات کی۔ دونوں لیڈروں کی اس ملاقات کے بعد سیاسی گلیاریوں میں قیاس آرائیوں کا دور شدت اختیارکرگیا ہے۔ قیاس آرائیوں کے درمیان دونوں فریقوں کی طرف سے یہ بات مسترد کردی گئی ہے کہ اس ملاقات میں سیاست سے متعلق کوئی چیزنہیں تھی۔فڑنویس اور راوت نے ایک ایسے وقت میں ملاقات کی ہے جب سوشانت سنگھ راجپوت اور اداکارہ کنگنا رناوت کے دفتر کو منہدم کرنے کے معاملے میں دونوں رہنماؤں کے مابین الفاظ کی جنگ جاری ہے۔ سنجے راوت نے اس ملاقات کی تصدیق کرتے ہوئے کہاہے کہ انہوں نے شیوسیناکے ترجمان سامناکے لیے فڑنویس کے انٹرویو دینے کے سلسلے میں ان سے ملاقات کی تھی اور مہاراشٹراکے وزیراعلیٰ ادھو ٹھاکرے اس سے بخوبی واقف ہیں۔ راوت شیو سینا کے سامناکے انچارج ہیں۔سنجے راوت نے نامہ نگاروں کوبتایاہے کہ دیویندر فڑنویس ہمارے دشمن نہیں ہیں۔ ہم نے ان کے ساتھ کام کیا ہے۔ میں ان سے سامناکے لیے انٹرویوکے لیے ملاہوں۔ یہ ملاقات پہلے سے طے شدہ تھی۔ یہاں تک کہ ادھو ٹھاکرے کو بھی یہ بات معلوم تھی۔انہوں نے کہا ہے کہ کیافڑنویس سے ملناجرم ہے؟ وہ سابق وزیراعلیٰ اوراب قانون ساز اسمبلی میں قائدحزب اختلاف ہیں۔ ہمارے نظریاتی اختلافات ہیں لیکن ہم دشمن نہیں ہیں۔