انتخابات میں لبھاونے وعدوں کا جائزہ لیا جائے: سپریم کورٹ

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے بدھ کو کہا کہ انتخابی فوائد کے لئے ٹیکس دہندگان کی محنت کی کمائی کو مفت تحائف پر لٹانے کے لبھاونے وعدوں سے معیشت کے فوائد اور نقصانات کا جائزہ لینے کے لئے ریزرو بینک آف انڈیا، نیتی آیوگ جیسا ماہر ادارہ تشکیل دیا جانا چاہئے۔سپریم کورٹ نے متعلقہ فریقوں سے کہا کہ وہ اس باڈی کی تشکیل پر غور و خوض کے بعد ایک ہفتے میں اپنی رائے دیں۔چیف جسٹس این وی رمنا اور جسٹس کرشنا مراری اور جسٹس ہیما کوہلی کی بنچ نے کہا کہ یہ تمام پالیسی سے متعلق سنگین مسائل ہیں، جس میں سب کو حصہ لینا چاہیے۔