دہلی میونسپل کارپوریشن ضمنی انتخاب: بی جے پی کاصفایا ، چار سیٹوں پر آپ کا قبضہ ، پانچویں کانگریس کے کھاتے میں

نئی دہلی:دہلی کی میونسپل کارپوریشن کے پانچ وارڈکے ضمنی انتخابات میں عام آدمی پارٹی نے چار نشستوں پر کامیابی حاصل کی ہے اور کانگریس نے ایک نشست پر کامیابی حاصل کی ہے۔ عام آدمی پارٹی کے امیدواروں نے ترلوکپوری ، شالیمار باغ وارڈ ، روہنی سی اور کلیان پوری نشستوں پر کامیابی حاصل کی ہے۔ جبکہ کانگریس کے امیدوار نے مشرقی دہلی کی چوہان بانگڑسیٹ پرکامیابی حاصل کی ہے۔ میونسپل کارپوریشن کے پانچ وارڈوں کے لئے 28 فروری کو ضمنی انتخابات ہوئے تھے۔ ان میں 50 فیصد سے زیادہ ووٹنگ ہوئی۔ ترلوکپوری وارڈ سے آپ کے امیدوار وجے کمار 4986 ووٹوں سے کامیاب ہوئے۔ کل ووٹ 12845ملے ۔بی جے پی امیدوار اوم پرکاش کو 7859 ووٹ ملے۔ شالیمار باغ وارڈ سے آپ کے امیدوار سنیتا مشرا 2705 ووٹوں سے کامیاب ہوئے۔ ان کوکل ووٹ 9764 ملے ۔بی جے پی امیدوار سربھی جاجو کو7059 ووٹ حاصل ہوئے۔ روہنی سی نشست سے عام آدمی پارٹی کے امیدوار رام چندر نے 2985 ووٹوں سے کامیابی حاصل کی۔ آپ کے امیدوار رام چندرا کو 14388 ووٹ ملے جبکہ بی جے پی امیدوار راکیش کو 11343 ووٹ ملے۔مشرقی دہلی میں چوہان بانگڑسیٹ سے کانگریس کے امیدوار زبیر احمد نے کامیابی حاصل کی۔ احمد کو 10642 ووٹوں سے کامیابی حاصل ہوئی۔ کانگریس کے امیدوار کو کل 16203 ووٹ ملے۔ جبکہ دوسرے نمبر پر آنے والے عام آدمی پارٹی کے امیدوارمحمد اشراق کو5561 ووٹ حاصل ہوئے۔ کلیان پوری میں آپ کے امیدوار دھریندر کمار نے 7043 ووٹوں سے کامیابی حاصل کی ہے۔ انہیں کل 14302 ووٹ ملے ہیں۔ جب کہ دوسرے نمبر پر رہنے والی بی جے پی کے امیدوار سیام رام کو 7259 ووٹ ملے ہیں۔انتخابات کے نتائج پر ڈپٹی سی ایم منیش سسودیا نے کہا کہ جس طرح دہلی کی عوام نے میونسپل کارپوریشن کے ضمنی انتخاب میں 5 میں سے 4 نشستیں دے کر اروند کیجریوال جی کی سیاست پر اعتماد کا اظہار کیا ہے اور جس طرح بی جے پی کا پتا صاف ہواہے یہ واضح ہوگیا کہ دہلی کی عوام اب میونسپل کارپوریشن کی 15 سالہ بی جے پی حکمرانی سے بہت تنگ آچکے ہیں اور اب چاہتے ہیں کہ بی جے پی کو جھاڑو سے مکمل طور پر صاف کیا جائے اور یہ اس بات کی علامت ہے کہ عوام کیا چاہتی ہے۔ انہوں نے ایم سی ڈی کے ضمنی انتخاب میں 5 میں سے 4 نشستیں جیتنے پر عام آدمی پارٹی کے کارکنوں کو مبارکباددی ۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی کی حکمرانی سے دہلی کی عوام اب پریشان ہوچکی ہے ۔ اگلے سال ہونے والے ایم سی ڈی انتخابات میں عوام اروند کیجریوال جی کی دیانت دار اور کام کرنے والی سیاست کو لے کر آئے گی۔