دہلی میں شراب پر 70 فیصد کورونا ٹیکس:کورٹ میں مفادِ عامہ کی عرضی داخل

نئی دہلی:دہلی میں شراب کی قیمتوں پر 70 فیصد کورونا ٹیکس لگانے کے خلاف ہائی کورٹ میں مفاد عامہ کی عرضی دائر کی گئی ہے۔دہلی حکومت نے تین مئی کو حکومت کی جانب سے شراب کی تمام 150 دکانیں کھولنے کی ہدایت دی تھی۔اس کے اگلے ہی دن یعنی چار مئی کو حکومت نے ہر قسم کی شراب پر 70 فیصد خصوصی کورونا ٹیکس لگا دیا تھا۔حکومت کے اس فیصلے کے خلاف دائر درخواست پر 11 مئی کو سماعت ہونے کی امید ہے۔عرضی میں چار مئی کی اس نوٹیفکیشن کو منسوخ کرنے کی اپیل کی گئی ہے۔بتا دیں کہ ملک بھر میں چل رہے لاک ڈاؤن کے تیسرے مرحلے کے درمیان دہلی حکومت نے شراب خریدنے کے لئے نیا سسٹم کی شروع کیا ہے۔ لاک ڈاؤن کے تیسرے مرحلے کے درمیان لوگوں کو کچھ رعایت ملی ہے۔جس سے شراب پر لگی پابندی کو بھی خارج کر دیا گیا ہے۔جس کے بعد لوگوں کی بھیڑ شراب کی دکانوں پر امڈ آئی۔لوگوں کو راحت دینے کے لئے اور بھیڑ کو کم کرنے کے لئے دہلی حکومت نے ای-ٹوکن جاری کیا۔ حکومت نے اس کے لئے ایک لنک بھی جاری کیا ہے۔جس پر جاکر یہ کوپن لیا جا سکتا ہے۔اس میں وقت مقرر کیا جائے گا۔جس وقت پر جا کر شراب خرید سکتے ہیں۔دہلی حکومت نے بھی حالات کے ساتھ 200 شراب کی دکانوں کو کھولنے کی اجازت دی تھی۔