دہلی،ہریانہ اورپنجاب نے لاک ڈاؤن میں توسیع کی

نئی دہلی:لیڈروں کی ریلیوں،کنبھ میلے اوربداحتیاطی سے کورونا کی دوسری لہرنے ملک میں تباہی مچادی ہے۔ زیادہ تر ریاستوں میں لاک ڈاؤن جیسی پابندیاں عائد ہیں۔ لاک ڈاؤن کی وجہ سے کورونا کے معاملات میں کمی آئی ہے ، لیکن صورتحال خوفناک ہے ، لہٰذا لاک ڈاؤن کو کئی ریاستوں میں بڑھایا جارہا ہے۔ دہلی ،پنجاب اور ہریانہ میں ایک بار پھر لاک ڈاؤن میں توسیع کردی گئی ہے۔ دونوں ریاستوں میں 24 مئی تک پابندیاں جاری رہیں گی اورپنجاب میں31مئی تک لاک ڈائون ہوگا۔ہریانہ میں 3 مئی سے لاک ڈاؤن ایک بار پھر بڑھا دیا گیا ہے۔ لاک ڈاؤن 24 مئی تک ریاست میں جاری رہے گا۔ یہ معلومات وزیراعلیٰ منوہر لال نے پانی پت میں دی۔ اس کے بعد ریاستی وزیر داخلہ اور وزیر صحت انل وج نے بھی وبائی الرٹ بڑھانے کے لیے ٹویٹ کیا ہے۔ اس بار لاک ڈاؤن میں مزید سختی ہوگی۔دہلی حکومت نے نئے معاملات میں کمی پر لاک ڈاؤن بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے۔ دہلی کے وزیراعلیٰ اروندکجریوال نے اتوار کے روز یہ معلومات دیں۔ انہوں نے کہاہے کہ کورونا کو کنٹرول کرنے کے لیے لاک ڈاؤن میں ایک ہفتے کی توسیع کی جارہی ہے۔ اب اگلے پیر کی شام پانچ بجے تک لاک ڈاؤن ہوگا۔خبر رساں ادارے اے این آئی کے مطابق سی ایم کجریوال نے کہا ہے کہ لاک ڈاؤن کل صبح 5 بجے تک تھا۔ دہلی میں بہت اچھی واپسی ہوئی ہے۔ کورونا بہت تیزی سے کم ہورہا ہے ۔ہم نہیں چاہتے ہیں کہ یہ فائدہ کم ہو ، لہٰذاہم ایک ہفتہ کے لیے لاک ڈاؤن بڑھا رہے ہیں۔ لاک ڈاؤن کو اگلے پیر تک بڑھایا جارہا ہے۔وزیراعلیٰ پنجاب کیپٹن امریندر سنگھ نے کورونا وائرس سے متعلق ریاست میں عائد پابندیوں کی مدت میں 31 مئی تک توسیع کردی ہے۔ حکومت پنجاب نے کوروناسے متعلق ہدایات اور ہدایات پر سختی سے عمل کرنے کی بھی ہدایت کی ہے۔امریندر سنگھ نے ایک ٹویٹ میں کہاہے کہ تمام اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز باقاعدہ طور پر دکانیں کھولنے کے حوالے سے اپنا فیصلہ لیں گ