دہلی اور این سی آر کے علاقوں میں ہوا کا معیارانتہائی خراب،سانس لینا مشکل

نئی دہلی:دہلی میں روزانہ ہوا کا معیار خراب ہوتا جارہا ہے۔ آج دہلی میں ہر طرف دھند چھائی رہی اور آس پاس کے علاقوں میں ہوا کا معیار بھی ’ہنگامی صورتحال‘ کے قریب پہنچ گیا۔ سنٹرل آلودگی کنٹرول بورڈ کے اعدادوشمار کے مطابق مندر مارگ، پنجابی باغ، پوسا، روہنی، پڑپڑگنج، جواہر لال نہرو اسٹیڈیم، نجف گڑھ، شری اروند مارگ اور اوکھلا فیز 2 میں ہوا کا معیار کافی خراب رہا۔ ہندوستان محکمہ موسمیات کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ دھند کی وجہ سے صبح کے وقت دیکھنے کی صلاحیت صرف 300 میٹر رہ گئی۔ دہلی میں صبح 9 بجے 487 کا اے کیو آئی ریکارڈ ہوا، جو ’سنگین‘ زمرے میں آتا ہے۔ پڑوسی شہروں فرید آباد (474)، غازی آباد (476)، نوئیڈا (490)، گریٹر نوئیڈا (467)، اور گروگرام (469) میں بھی ’سنگین ‘ہوا کا معیار ریکارڈ کیا گیا۔ دہلی میں سنگینی کا یہ چھٹا دن ہے۔ گزشتہ سال نومبر میں اس شہر نے سنگینی کے سات دن دیکھے تھے۔اگر پی ایم 2.5 اور پی ایم 10 کی سطح 300 ملی گرام / ایم 3 اور 500.5 گرام / ایم 3 سے زیادہ ہے تو ہنگامی اقدامات جیسے تعمیراتی سرگرمیوں پر پابندی، ٹرکوں کے داخلے اور کار راشن یوجنا کو 2017 میں ماحولیات اور وزارت جنگلات کی ہدایات کے ذریعہ دہلی-این سی آر کے لیے گریڈڈ رسپانس ایکشن پلان کے تحت عمل کیا جاسکتا ہے۔