دواخانوں اور زچگی گھروں میں نرسوں کو بروقت تنخواہ دینے کیلئے عدالت میں درخواست دائر

 

نئی دہلی:دہلی ہائی کورٹ میں ایک درخواست دائر کی گئی ہے جس میں شمالی دہلی میونسپل کارپوریشن کے زیر انتظام ڈسپنسریوں، زچگی گھروں اور بچوں کے بہبود مراکز میں صحت کارکنان کو تنخواہوں کی عدم ادائیگی کا الزام عائد کیا گیا ہے۔ درخواست میں دعوی کیا گیا ہے کہ اسسٹنٹ نرسز (اے این ایم)، خواتین ہیلتھ ورکرز اور پبلک ہیلتھ نرسوں کو مئی کے بعد سے تنخواہیں نہیں ملی ہیں۔ یہ درخواست منگل کو سماعت کے لئے چیف جسٹس ڈی این پٹیل اور جسٹس پریتک جالان کی بنچ کے سامنے درج کی گئی تھی۔ تاہم انہوں نے اس کی سماعت سے خودکوالگ کرلیا اور اسے دوسری بنچ کے سامنے درج کرنے کی ہدایت دی۔ اسپتال ایمپلائز یونین (ایچ ای یو) کے ذریعہ دائر درخواست میں دعوی کیا گیا ہے کہ یہ نرسیں کووڈ 19 وبا کی ابتدا کے بعد سے ہی کام کر رہی ہیں، لیکن اس کے باوجود انہیں وقت پر تنخواہیں نہیں مل رہی ہیں۔