دوحہ مذاکرات میں جنگ بندی کی کوئی پیش کش نہیں کی، افغان طالبان

کابل:افغان طالبان کے قطری دارالحکومت میں قائم سیاسی دفتر کے ایک ترجمان نے کہا ہے کہ طالبان نے دوحہ مذاکرات کے دوران افغان حکومت کو کسی جنگ بندی کی کوئی پیش کش نہیں کی۔ اس دفتر کے ترجمان نے قطری نشریاتی ادارے الجزیرہ ٹی وی کو بتایا کہ اس بات چیت میں طالبان نے ایسی کوئی تجویز نہیں دی کہ وہ افغانستان میں تین ماہ تک جنگ بدی کے لیے تیار ہیں۔ ترجمان نے تاہم کہا کہ طالبان کی دوحہ میں کابل حکومت کے وفد کے ساتھ مکالمت آئندہ بھی جاری رہے گی تا کہ فریقین اپنے اپنے موقف میں ایک دوسرے کے قریب آ سکیں۔