کوویڈپرمرکزاورریاستی حکومت سنجیدہ نہیں،سپریم کورٹ نے سخت پھٹکارلگائی

نئی دہلی:ملک میں کورونا وائرس کے مریضوں کی تعدادمیں اضافہ ہورہا ہے۔ روزانہ کورونا وائرس کے نئے مریض سامنے آرہے ہیں۔الیکشن ،ریلیوںاورتہواروں کی وجہ سے بعض ریاستوں میں کوروناکنٹرول سے باہرہے۔کورونا وائرس کی وجہ سے ہلاکتوں کی تعداد بھی رکنے کا نام نہیں لے رہی ہے۔ دوسری طرف یہ بھی دیکھا گیا ہے کہ لوگ کورونا وائرس سے متعلق اصولوں پر عمل نہیں کررہے ہیں۔ بہت ساری جگہوں پرلوگ اب بھی سماجی دوری کے ضوابط کو نظر انداز کر رہے ہیں اور بھیڑ والی جگہوں پرجارہے ہیں۔ خودسیاسی لیڈران کی انتخابی ریلیوں میں جم کراصول کی دھجیاں اڑائی گئی ہیں۔جن میں حکمراںبی جے پی کے سنیئرلیڈروں کی ریلیاں بھی شامل ہیں۔اس کے علاوہ لوگ ماسک بھی مناسب طریقے سے نہیں پہنے ہوئے ہیں ، جس کے لیے اب سپریم کورٹ نے مرکز اور ریاستی حکومت پر برہمی کا اظہار کیا ہے۔سپریم کورٹ نے کہا ہے کہ 80 فیصد لوگ بغیرکسی ماسک کے چل رہے ہیں۔ ریاست اور مرکزی حکومت کو کوئی سروکار نہیں ہے۔ حکومت کے ذریعہ صرف ایس او پیزبنائے گئے ہیں۔