کورونا کے پیش نظر رام مندر ’بھومی پوجن‘کوابھی ٹالاجاسکتاتھا:راج ٹھاکرے

ممبئی:مہاراشٹر نو نرمان سینا (ایم این ایس) کے سربراہ راج ٹھاکرے نے کہا ہے کہ عالمی وبائی مرض کووڈ 19 بحران کے تناظر میں ابھی ایودھیا میں رام مندر کے لئے ’بھومی پوجن‘ پروگرام کے انعقاد کی ضرورت نہیں تھی اور صورتحال معمول پر آنے کے بعد اس کا انعقاد کیا جاسکتا تھا۔5 اگست کو رام مندر کے لئے ’بھومی پوجن‘ پروگرام کا انعقاد کیا جارہا ہے۔ ٹھاکرے نے مہاراشٹر کے وزیر اعلی ادھو ٹھاکرے کے ’ بھومی پوجن‘ کے مشورے کو بھی مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھومی پوجن پروگرام بڑے جوش و جذبے کے ساتھ چلنا چاہئے۔ایم این ایس کے سربراہ نے کہاکہ اس وقت بھومی پوجن کرنے کی ضرورت نہیں تھی، کیونکہ لوگوں کی ذہنی حالت بالکل مختلف ہے۔ اگر صورتحال معمول پر تھی تو یہ دو مہینے کے بعد بھی ہوسکتی ہے۔ تب لوگ بھی اس پروگرام سے لطف اندوز ہوتے۔شری رام جنم بھومی تیرتھ چھترنیاس نے وزیر اعظم کو ایودھیا میں بھومی پوجن کے لئے مدعو کیا ہے۔ ٹرسٹ کے ممبروں کے مطابق توقع ہے کہ وزیر اعظم 5 اگست کو رام مندر کی تعمیر شروع کرنے کے لئے بھومی پوجن کرنے ایودھیا کا دورہ کریں گے۔