کانگریس میں ٹوٹ کاخدشہ،تیجسوی یادونے تسلی دلائی،حکومت ہماری ہوگی

پٹنہ:اگرچہ بہار اسمبلی انتخابات کے نتائج آچکے ہیں ، لیکن ریاست میں اب بھی سیاسی ہلچل جاری ہے۔ جمعرات کے روز عظیم اتحادکے لیڈروں کی ایک میٹنگ پٹنہ میں سابق وزیراعلیٰ را بڑی دیوی کی رہائش گاہ پر ہوئی ۔اس میٹنگ میں آر جے ڈی لیڈر تیجسوی یادو نے ممبران اسمبلی کو مخاطب کرتے ہوئے دعویٰ کیاہے کہ حکومت ان کی ہوگی۔تیجسوی یادونے اپنے اراکین اسمبلی سے اگلے ایک مہینے پٹنہ میں رہنے کی اپیل کی ہے۔کچھ رپورٹ ایسی بھی ہے کہ مکیش سہنی جوخودالیکشن ہارگئے ہیں،انھیں نائب وزیراعلیٰ کی پیش کش کی گئی ہے ۔اسی طرح ہوسکتاہے کہ آرجے ڈی ،کانگریس مانجھی سے رابطہ کرے۔اگرایساہوتاہے تومجلس اتحادالمسلمین کے ساتھ انھیںاکثریت مل سکتی ہے۔کیوں کہ آرجے ڈی سب سے بڑی پارٹی ہے اوراسے اس حیثیت سے حکومت سازی کادعویٰ پیش کرنے کاحق ہے۔اگر ذرائع پر یقین کیا جائے تو تیجسوی یادو کو خدشہ ہے کہ کانگریس کے کچھ ایم ایل اے اتحاد سے ٹوٹ سکتے ہیں لہٰذا وہ پوری طرح چوکنا رہنا چاہتے ہیں۔ اس میٹنگ میں تیجسوی یادو کو عظیم اتحادکالیڈر منتخب کیاگیاہے۔در حقیقت ، گرینڈ الائنس اب بھی پر امید ہے کہ این ڈی اے میں سب کچھ ٹھیک نہیں چل رہا ہے اور وہ یہ دیکھنے کے لیے انتظار کریں گے کہ جیتن رام مانجھی ، مکیش سہنی کی پارٹیوں کو کابینہ میں کتنا حصہ ملے گا۔کیونکہ اگر این ڈی اے میں کچھ خراب ہوتا ہے توگرینڈ الائنس اس کا فائدہ اٹھا سکتا ہے۔مہاگٹھ بندھن کی میٹنگ کے بعد تیجسوی یادو نے کہاہے کہ عوام کی حمایت گرینڈ الائنس کے ساتھ ہے ، ہمیں تقریباََ 130 سیٹیں ملی ہیں لیکن نتیش کمارنے دھوکہ دہی سے جیت حاصل کی ہے۔تیجسو ی یادونے متعدد نشستوں پر گنتی میں دھاندلی کاالزام عائدکیاہے۔