سی اے اے پراین ڈی اے میں کنفیوژن:یوگی نے کہا،حکومت بنتے ہی دراندازوں کونکال دیں گے، نتیش کمارکاانکار

کٹیہار:راجیہ سبھامیںسی اے اے پرووٹ دیناجدیوکے لیے کافی مہنگاثابت ہورہاہے۔مسلم عوام نتیش کمارسے سخت ناراض ہے،بی جے پی لیڈروں کے سی اے اے پربیانات کے بعدجدیواوراس کے مسلم چہروں کوجواب دینامشکل پڑگیاہے۔ووٹ کھسکتے دیکھ کرنتیش کمارنے اسٹینڈبدلاہے۔جن کی پارٹی نے خودایوان میں سی اے اے پاس کرانے میں اہم کرداراداکیا۔بی جے پی بیان دیتی ہے کہ حکومت تشکیل دینے کے ساتھ ساتھ دراندازوں کونکال دیں گے،لیکن خوداس حکومت کے مکھیانتیش کماربالکل اس کے خلاف بیان دیتے ہیں توسوال یہی ہے کہ بی جے پی کس طرح اپنی باتوں پرعمل کرے گی کیوں کہ اس کے وزیراعلیٰ چہرہ اس کی مخالفت کررہے ہیں،یاپھرنتیش کمارکووزیراعلیٰ بنانے کاارادہ نہیں ہے۔ یعنی یاتوسی اے اے،این آرسی پرخوداین ڈی اے میں کنفیوژن ہے یانتیش کماربے وقوف بنارہے ہیں۔ کٹیہارمیں بی جے پی کے فائربرانڈلیڈر،منتازعہ بیانات کے لیے مشہوراور یوپی کے وزیراعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے کہا کہ این ڈی اے حکومت تشکیل پاتے ہی دراندازوں کا پیچھاکرے گی۔ کشن گنج ، وہاں سے چند سو ڈیڑھ سو کلومیٹر دورہے۔ وہاں بہار کے وزیراعلیٰ نتیش کمار بہت زیادہ طاقت لگا رہے ہیں ۔ووٹ کھسکتادیکھ کرنتیش کمارنے کہا کہ یہاں کسی کو CAA-NRC کے نام پر ہمارے لوگوں کو باہرکرنے کی ضرورت نہیں ہے۔ بہار اسمبلی انتخابات کے آخری دورکے لیے لڑائی ابھی باقی ہے۔78 نشستوں پر ووٹنگ ہونی ہے ، لیکن تیسرے مرحلے سے عین قبل ، این ڈی اے میں سی اے اے – این آر سی کے معاملے پر بہت بڑی الجھن اس کونقصان پہنچا سکتی ہے۔یوپی کے سی ایم یوگی آدتیہ ناتھ نے کہاہے کہ کٹیہار دراندازی کے مسئلے سے دوچارہے۔ جب بہار میں این ڈی اے کی حکومت بنے گی تو ہم دراندازوں کو نکال دیں گے۔ این ڈی اے بی جے پی کے امیدوار تر کشور کو چوتھی بار آشیرواد دینے کے لیے کہا،انھوں نے کہا کہ آپ کے آشیروادسے دراندازی کا مسئلہ حل ہوجائے گا۔ یوگی کے مطابق بہار میں حکومت بنتے ہی دراندازوں کو نکال دیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ کٹیہار دراندازی کے مسئلے سے پریشان ہے۔ اس کی جانچ ہوگی۔بہار کے کشن گنج میں انتخابی مہم کے لیے آئے سی ایم نتیش کمار نے نہ صرف اقلیتوں کے لیے کیے جانے والے کام کے بارے میں بات کی ، بلکہ شہری ترمیمی قانون (سی اے اے) اور این آر سی کے معاملے پر اے آئی ایم ایم کے رکن پارلیمنٹ اسدالدین اویسی کو بھی نشانہ بنایا۔ انہوں نے تقریر کے آغاز میں ہی کہا کہ کچھ لوگ ایسی سازشیں کر رہے ہیں کہ لوگوں کو ملک سے باہرمنتقل کردیا جائے گا۔ نتیش کمارنے کہا کہ ہمارے لوگوں کو ملک سے نکالنے کے لیے کسی میں طاقت نہیں ہے۔