بی جے پی ممبر اسمبلی نے افسران کو دی جوتوں سے مارنے کی دھمکی

مہوبہ:اتر پردیش کے مہوبہ ضلع کے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) ممبر اسمبلی نے حکام کو جوتوں سے مارنے کی دھمکی دی ہے۔اس سے پہلے ممبر اسمبلی نے مہوبہ ضلع کے ڈی ایم، ایس پی کو اناڑی، چور اور دلال کہہ کر ہلچل مچا دیا تھا۔اب انہیں جوتوں سے مارنے کی سرعام دھمکی دی ہے۔دراصل دو دن پہلے ممبر اسمبلی برجبھوش راجپوت بھیس بدل کر گیہوں خریدنے سینٹر پہنچے تھے اور اپنی فصل فروخت کرنے کی بات کہی۔اس پر خریداری مرکز انچارج نے کمیشن مانگا۔گیہوں خریداری میں کمیشن لیے جانے کا ممبر اسمبلی نے اسٹنگ آپریشن کیا تھا۔اسی اسٹنگ آپریشن کی ویڈیو جاری کرتے ہوئے ممبر اسمبلی برجبھوش راجپوت کافی جذباتی ہو گئے۔اس کے بعد بی جے پی ممبر اسمبلی برجبھوش راجپوت نے حکام کو جوتا مارنے کی دھمکی دی۔انہوں نے کہا کہ احترام میں پریشانی آئے گی، برداست نہیں کیا جائے گا، جوتا چلے گا جوتا۔واقعی یہی کروں گا، اگر کسانوں سے یہ روپیہ لیں گے تو میں اپنا جوتا چلاؤں گا۔میرے خلاف مقدمے لکھنا ہو تو لکھ لو۔بی جے پی ممبر اسمبلی برجبھوش راجپوت نے کہا کہ اب افسر بے عزت ہوگا ۔حکام کو دھمکی دیتے ہوئے بی جے پی ممبر اسمبلی برجبھوش راجپوت نے کہا کہ مگر مجھے یہ برداشت نہیں ہوگا کہ میرے کسان کا استحصال ہوتا رہے۔اب تم لوگ سدھر جائو، ورنہ اب میں سدھارنے کو تیار بیٹھا ہوں، اب جوتا چلے گا۔اتنا جوتا ماریں گے کہ کوئی افسر پیسہ لینے سے پہلے سوچے گا۔