بی جے پی کی ’بی ٹیم‘ ہونے کے الزام پراویسی بولے:میں ایک لیلا ہوں اور میرے ہزاروں مجنوں ہیں

حیدرآباد:اے آئی ایم آئی ایم کے چیف اسد الدین اویسی نے کہاکہ میری حالت یہ ہے کہ میں ایک لیلیٰ ہوں اور میرے پاس ہزاروں مجنوں ہیں۔ اویسی نے کہا کہ تمام جماعتیں ایک مسئلہ بنا کر میرا فائدہ اٹھانا چاہتی ہیں۔ اویسی نے بی جے پی پر حیدرآباد کے سیلاب کے دوران یہاں کے لوگوں کو مکمل طور پر نظرانداز کرنے کا الزام عائد کیا۔اویسی نے کہاکہ بہار میں کانگریس نے کہا ہے کہ میں ووٹ کٹوا ہوں، میں بی ٹیم ہوں۔ یہاں حیدرآباد میں کانگریس کہہ رہی ہے کہ اگر اویسی نہیں تو ہمیں ووٹ دے دو ۔ بی جے پی کچھ اور ہی کہہ رہی ہے۔ مجھے پرواہ نہیں،حیدرآباد کے لوگ حقیقت کو جانتے ہیں۔اویسی نے مزید کہاکہ میں ایک لیلیٰ ہوں اور ہر ایک چاہتا ہے کہ مجھے ایشو بنا کر ووٹ حاصل کیا جائے ۔ حیدرآباد کے لوگ دیکھ رہے ہیں کہ اسدالدین اویسی کی جماعت حیدرآباد کو ہر پہلو سے بہتر بنانے کی کوشش کر رہی ہے۔ اب عوام اس معاملے کا فیصلہ کرے گی۔جب اویسی سے پوچھا گیا کہ امیت شاہ پوچھتے ہیں کہ جب حیدرآباد میں سیلاب آیا تو اویسی برادران اور ٹی آر ایس کہاں تھے؟ اس پر اویسی نے کہاکہ امیت شاہ کے جو چمچے ہیں وہ بالکل بہرے اور اندھے ہیں۔ اکبرالدین اویسی نے ساڑھے تین کروڑ کی امداد تقسیم کی۔ اسد الدین اویسی روز گھٹنوں گہرے پانی میں چل رہے تھے۔ ہمارے پاس اس کی ویڈیوزہیں۔ ہم لوگوں کی جانیں بچا رہے تھے۔ ہم وزیراعلیٰ سے مل کر ہر گھر کو10 ہزار روپئے دلوائے۔