بی جے پی دفترسے گزرتے وقت حفاظت کے لیے لاٹھی ساتھ رکھو،پپو یادو کے حامیوں پرحملے کے بعدتیج پرتاپ یادوکاطنز

نئی دہلی:لیڈران کی جانب سے ایک دوسرے کو نشانہ بنانے کے دورمیں بہار اسمبلی انتخابات میں شدت آگئی ہے۔ کسان بل پر احتجاج کے دوران پپو یادو کی پارٹی جن ادھیکار پارٹی اور بی جے پی کارکنان کے درمیان جھڑپ ہوئی۔بی جے پی کارکنوں پرپپو یادوکے حامیوں کو پیٹنے کا الزام لگایا گیا ہے۔ پپو یادوکے حامی بی جے پی کے دفتر کا محاصرہ کر رہے تھے۔ اس دوران بی جے پی کارکنوں نے انھیں لاٹھیوں اور ڈنڈوں سے پیٹا۔ ہفتہ کے روز بہار کے سابق وزیر صحت اور آر جے ڈی رہنما تیج پرتاپ یادونے اس واقعے پرطنزکیاہے۔تیج پرتاپ یادونے ہفتے کے روز ایک ٹویٹ میں لکھاہے کہ تمام لوگوں کو مطلع کیا جاتا ہے کہ بہار بی جے پی کے دفتر سے گزرتے ہوئے انہیں لاٹھیاں ساتھ رکھنی ہوں گی ۔ بصورت دیگر وہ کچل دیئے جائیں گے۔کوشاشن باقی رہے گا لیکن خاموش تماشائی بن کر۔ اس واقعے پر جن ادھیکار پارٹی کے صدر اور سابق رکن اسمبلی پپو یادونے کہاہے کہ بہارکے عوام کسانوں کے لیے احتجاج کرنے والے ہمارے معزز سابق ایم ایل اے رام چندر یادو جی پربی جے پی کے غنڈوں کے حملے کا زبردست جواب دیں گے۔کسان مخالف نریندر مودی اور ان کے دہشت گردوں کو عوام جواب دے گی۔