بہارمیں پھربغیرجانچ کے رپورٹ آئی،علاج کے لیے دوابھی گھربھیج دی گئی

آرہ:بہارکاطبی نظام اتناتیزہے کہ بغیرٹیسٹ کے ہی رپورٹ آنے لگی ہے۔لوگوں کوکبھی د س دس دن رپورٹ کاانتظارکرناپڑتاہے لیکن ایسابھی ہوتاہے کہ بغیرجانچ کے رپورٹ آجاتی ہے۔بہارکے آرہ ضلع میں محکمہ صحت کی بڑی غفلت کاانکشاف ہواہے۔ یہاں پرکسی جانچ کے بغیرایک بزرگ کی کورونارپورٹ مثبت آگئی۔ اس کے بعدڈاکٹروں کی جانب سے گھر پر دوائیں بھی ارسال کردی گئیں۔ بزرگ شیوسنگھ (70) ہیں اور وہ پیشے سے فوٹوگرافرہیں۔ بابورا میں ایک اسٹوڈیوچلاتے ہیں۔ بزرگ کا کہنا ہے کہ انھوں نے کوروناکی جانچ نہیں کرائی۔ 11 جولائی کو ، بابورا میں ایک کیمپ لگایاگیاتھا۔ وہاں انھوں نے اپنا رجسٹریشن کروایاتھالیکن طبی کارکنان نمونہ لینے نہیں آئے ۔کوروناکی بڑھتی ہوئی وباکی وجہ سے انھوں نے اپنی جانچ کافیصلہ کیا۔ شیوجانم سنگھ کا کہنا ہے کہ ان میں کورونا کی کوئی علامت نہیں ہے۔ جانچ کے بغیر رپورٹ کا یہ پہلا کیس نہیں ہے۔ اس سے قبل پٹنہ میں بھی اس طرح کے واقعات رپورٹ ہوئے ہیں۔ اس کے علاوہ بہت سارے لوگ ہیلتھ سینٹرجاکرجانچ کروارہے ہیں لیکن انہیں وقت پر رپورٹ نہیں مل رہی ہے۔ اسپتالوں کے چکرلگانے ہورہے ہیں۔ موبائل پرمیسج بھی دستیاب نہیں ہے۔