بھارت بند:بی جے پی نے کہا-کجریوال ہاؤس ایرسٹ نہیں،ہاؤس ریسٹ میں ہیں

نئی دہلی:نظربندی کے الزام پربی جے پی نے کیجریوال پرپلٹ وارکرتے ہوئے کہاہے کہ وزیراعلیٰ گھر میں نظربند نہیں ہیں۔ کجریوال ایک سی سی ٹی وی فوٹیج میں تقریب میں شریک دکھائی دے رہے ہیں۔بی جے پی نے وزیراعلیٰ اروندکیجریوال کے اس الزام پر جوابی حملہ کیاہے کہ انہوں نے دہلی پولیس اور مرکزی حکومت پر انھیں نظربند کرنے کا الزام عائد کیا ہے۔ دہلی بی جے پی کے صدر آدیش گپتا نے کیجریوال پر یہ کہتے ہوئے الزام عائد کیا ہے کہ بھارت بند دہلی میں مکمل طور پر غیر موثر ہے۔آدیش گپتا نے مزید کہاہے کہ دہلی کے لوگوں نے کیجریوال کی اپیل کو مسترد کردیا ہے۔ اسی لیے کجریوال گھر کے اندر بیٹھے چہرہ چھپا رہے ہیں۔آدیش گپتا یہیں نہیں رکے ، انہوں نے کہا کہ پچھلے 7 ماہ سے کجریوال اپنے گھر میں آرام کر رہے ہیں ، وہ کب باہر جاتے ہیں؟ دہلی پولیس نے خود ان کی نظربندی کے دعوے کو مسترد کردیا ہے۔ دہلی پولیس نے واضح کیاہے کہ پولیس اہلکار سیکیورٹی کے پیش نظر ان کے گھر کے باہر تعینات کردیے گئے ہیں۔اروند کیجریوال پرحملہ کرتے ہوے آدیش گپتا نے کہاہے کہ دہلی حکومت 65 ہزار کروڑ کے بجٹ کا غلط استعمال کر رہی ہے۔ ہزاروں کروڑ روپے اشتہاروں میں خرچ ہوے،جبکہ کارپوریشنوں کو کوروناکے وقت میں رقم دی جانی چاہیے۔انہوں نے کہاہے کہ تینوں کارپوریشنوں کو13000 کروڑ روپیے دیے جانے تھے لیکن دہلی حکومت پیسہ نہیں دے رہی ہے اورجب تک دہلی کارپوریشن کویہ رقم نہیں دی جاتی ہے، اروند کیجریوال کے گھر کے باہر ہمارا احتجاج اسی طرح جاری رہے گا۔آدیش گپتا نے مزیدکہاہے کہ دہلی کے لوگوں نے کیجریوال کی اپیل کو مسترد کردیاہے۔ اسی لیے کجریوال گھر کے اندر بیٹھے چہرہ چھپارہے ہیں۔ وزیراعلیٰ اروند کیجریوال پر حملہ کرتے ہوئے آدیش گپتا نے کہاہے کہ کیجریوال کوگرفتارنہیں کیا گیا ہے بلکہ وہ گھر میں آرام کررہے ہیں۔