بلجیم:قرآن کی بے حرمتی کا منصوبہ بنانے والے 5 ڈنمارک کے افراد بلجیم بدر

برسلز:بلجیم نے مسلمانوں کو اشتعال دلانے کے لیے قرآن پاک کی بے حرمتی کی منصوبہ بندی کرنے والے ڈنمارک کے 5 شہریوں کو گرفتار کرکے ملک بدر کردیا۔خبر ایجنسی ’اے ایف پی‘ کی رپورٹ کے مطابق گرفتار افراداسٹرام کورز’ یا ‘ہارڈ لائن’ کے اراکین تھے، جس کی سربراہی ڈنمارک کے اسلام مخالف اور مائیگریشن مخالف انتہا پسند راسموس پلوڈان کر رہے ہیں۔گروپ کے سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک کے پیچ کے مطابق پلوڈان خود فرانس میں گرفتار ہوئے تھے اور وہاں سے انہیں واپس بھیج دیا گیا تھا۔اسٹرام کورز یورپ کے شمالی خطے (اسکینڈینیویا) میں اشتعال انگیز اقدامات کے لیے مشہور ہے اور بلجیم کے حکام کا ماننا ہے کہ گروپ نے دارالحکومت برسلز کے ضلع مولن بیک میں قرآن پاک کی بے حرمتی کرنے کا منصوبہ بنایا تھا ،جہاں مراکش سے تعلق رکھنے والے افراد کی ایک بڑی تعداد موجود ہے۔رپورٹ کے مطابق پولیس نے مبینہ منصوبے کے حوالے سے حقائق برسلز میں واقع پراسیکیوٹر کے دفتر کو بھیج دیئے تھے۔ عراقی مہاجر کے بیٹے اور بلجیم کے سیکریٹری آف اسٹیٹ فار مائیگریشن و مہاجرین سیمی مہدی نے پانچوں ملزمان کی گرفتاری کا خیر مقدم کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ انہیں فوری طور پر ملک چھوڑنے کا حکم دیا گیا تھا اور انہوں نے اس پر عمل کیا۔بیان میں کہا گیا کہ ان افراد کو ملک میں رہنے کی اجازت اس لیے نہیں دی گئی ،کیونکہ وہ بلجیم کے امن و امان کے لیے خطرہ تھے، حال ہی میں فرانس میں ایک اورآدمی انہی وجوہات پر گرفتار کیا گیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ جرمنی میں بھی مذکورہ آدمی کے حوالے سے اسی طرح کے فیصلے کیے جا چکے ہیں جس کو سکیورٹی ادارے نفرت کا مبلغ تصور کرتے ہیں۔ بلجیم کے وزیر سیمی مہدی نے بتایا کہ ہمارا معاشرہ پہلے ہی کثیرالمذاہب ہے اور یہاں شہریوں میں نفرت پھیلانے کی گنجائش نہیں ہے ۔

    Leave Your Comment

    Your email address will not be published.*