عوام کےلیے13 فروری سے کھل جائے گا راشٹرپتی بھون کا مغل گارڈن

نئی دہلی:کورونا وائرس (کووڈ۔19) وبا کی وجہ سے بند کیا گیا راشٹرپتی بھون کا مغل گارڈن ایک بار پھر 13 فروری سے عوام کے لیے کھلنے جا رہا ہے۔صدر جمہوریہ رام ناتھ کووند 12 فروری کو راشٹرپتی بھون کے سالانہ گارڈن فیسٹیول کا افتتاح کریں گے۔ اس سے قبل جمعرات کو یہاں صحافیوں کو مغل گارڈن سے رو برو کرایا گیا۔ صدر کی ڈپٹی پریس سکریٹری کیرتی تیواری نے صحافیوں کو بتایا کہ عام لوگوں کو صبح دس بجے سے شام پانچ بجے تک گارڈن دیکھنے کی سہولت حاصل ہوگی۔ آخری داخلہ شام چار بجے تک ہی ممکن ہو گا۔انہوں نے کہا کہ راشٹرپتی بھون کے 35 نمبر گیٹ سے ایک گھنٹے کے لیے ایک بار 100 افراد کو انٹری دی جائے گی۔ مغل گارڈن، راشٹرپتی بھون میوزیم اور راشٹرپتی بھون کو دیکھنے کے خواہشمند افراد کے پاس کے لیے راشٹرپتی بھون کی سرکاری ویب سائٹ کے ذریعہ صر ف آن لائن رجسٹریشن ہی متبادل ہے، جو مفت ہے۔ محترمہ تیواری نے کہا کہ کورونا کے پیش نظر مغل گارڈن دیکھنے کے خواہشمند وں کے لیے خصوصی رہنما خطوط جاری کیے گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سکیورٹی وجوہات کی بناء پر مغل گارڈن کمپلیکس میں پانی، دودھ کی بوتل، بریف کیس، ہینڈ بیگ، لیڈی پرس، کیمرا، ریڈیو، چھتری اور دیگر قابل اعتراض اشیاء پر پابندی رہے گی۔ اس کے ساتھ لوگوں کو تھرمل اسکریننگ، ماسک پہننے اور سماجی فاصلے جیسے ضابطوں پر عمل کرنا ہوگا۔واضح ر ہے کہ راشٹرپتی بھون کے مغل گارڈن کو دیکھنے کے لیے دور دور سے لوگ آتے ہیں۔ دس مہینے قبل کورونا وبا کے سبب اسے بند کردیا گیا تھا۔ اب ایک بار پھر اسے کھولا جارہا ہے۔ راشٹرپتی بھون کے اس باغ میں کئی اقسام کے گلاب اور ٹیو لپ کے پھول ہیں۔