ایپ کی جنگ میں تو چین کو شکست دے دی،لیکن پے ٹی ایم کیوں بند نہیں کیا ؟سابق وزیر پرکاش راج بھر کا طنز

لکھنؤ :مرکزی حکومت کی جانب سے پابندی عائد کرنے کے بعد گوگل پلے اسٹور اور ایپل کے ایپ اسٹور سے بھی ٹک ٹاک کو ہٹا دیا گیا ہے۔ پیر کی شام حکومت نے ٹک ٹاک ، ہیلو سمیت 59 چینی موبائل ایپ پر پابندی عائد کردی تھی۔ حالانکہ جن یوزرنے ٹکٹ لاک ایپ ڈاؤن لوڈ کیا ہے وہ ایپ پر ویڈیوز پوسٹ کرسکیں گے۔ لیکن اب کوئی نیا یوزراس ویڈیو ایپ کو ڈاؤن لوڈ نہیں کر سکے گا۔ ادھر سابق کابینہ وزیر اوم پرکاش راج بھر نے وزیر اعظم مودی کو نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ ایپ کو بند کرنے کی جنگ میں پی ایم مودی نے چین کو شکست دی ہے لیکن پے ٹی ایم کو بند کیوں نہیں کیا گیا۔پہلے حکومت کے حلیف رہے سہلدیوگی یو بھارتیہ سماج پارٹی کے قومی صدر اوم پرکاش راج بھر نے یہ باتیں ٹیوٹر پر کہیںانہوں نے کہا کہ ہم مرکزی حکومت کی طرف سے لگائی پابندی کا خیرمقدم کرتے ہیں۔ چین کی ہمت نہیں ہے کہ ہندوستان کا کسی موبائل ایپ پر پابندی عائد کردے ۔ ایپ پر پابندی عائد کرنے کی لڑائی میں مودی جی نے چین کو شکست دی۔ – لیکن جس ایپ کے برانڈ ایمبیسڈر ہیں اس پے ٹی ایم کو کیوں بند نہیں کیا گیا۔ ہندوستان کی داخلی سلامتی اور خودمختاری کے لئے چینی سامان کی درآمد سے متعلق تمام لائسنسوں کو منسوخ کرنے کی ضرورت ہے۔ ہمارے ملک کے 20 جوانوں کی شہادت کا بدلہ ابھی پورا نہیں ہوا ہے۔

    Leave Your Comment

    Your email address will not be published.*