امیتابھ اوراکشے کماراب پٹرول،ڈیزل کی شرحوں پرچپ کیوں؟کانگریس

ممبئی:مہاراشٹر کانگریس کے صدر نانا پٹولے نے پیٹرول اور ڈیزل کی بڑھتی قیمتوں پر خاموشی کے لیے سپر اسٹار امیتابھ بچن اور سپراسٹار اکشے کمار کو نشانہ بنایا ہے۔ انہوں نے یہ سوال اٹھایا ہے کہ جب منموہن سنگھ حکومت کے دوران ایندھن کی قیمتوں میں اضافہ ہوا تھا ، ان اداکاروں نے سوشل میڈیا پر اس پر کافی تنقید کی تھی۔ انہوں نے اپنے بیان کے دوران مرکز کی مودی حکومت کو بھی ڈکٹیٹر قرار دیا ہے۔ایک پریس کانفرنس میں ناناپٹولے نے کہا ہے کہ یوپی اے حکومت کے دوران جب پٹرول،ڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ ہوا توشور مچانے والے اداکار کہاں ہیں؟ اس وقت جب پٹرول 70 روپے فی لیٹر تھا ، امیتابھ بچن اور اکشے کمار نے اس کے خلاف اپنا احتجاج ظاہر کیا۔ لیکن اب جب پیٹرول 100 روپے فی لیٹر ہوچکا ہے تو وہ کیوں خاموش ہیں؟ کیا ان میں ہمت نہیں ہے کہ وہ آمر مودی سرکار کے خلاف بات کریں۔ناناپٹولے کہتے ہیں کہ یو پی اے حکومت نے جمہوری طریقے سے کام کیا ، لہٰذا وہ اس پر تنقید کرنے میں کامیاب رہے۔ پریس کانفرنس کے دوران پاٹل نے مرکزی حکومت سے پیٹرول ، ڈیزل اور ایل پی جے کے نرخوں میں کمی کرکے عام آدمی کو ریلیف فراہم کرنے کا مطالبہ بھی کیا۔انہوں نے مودی حکومت پر عوام کی جیب کاٹنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہاہے کہ بین الاقوامی مارکیٹ میں خام تیل کی قیمت کو دیکھتے ہوئے ملک میں ڈیزل 25 اور پیٹرول 35 روپے فی لیٹر فروخت ہونا چاہیے۔امیتابھ بچن اپنی آنے والی فلم کی شوٹنگ میں مصروف ہیں ، جس کے ہدایت کار اجے دیوگن ہیں۔ فلم میں اجے دیوگن ، راکول پریت سنگھ ، انگیرا دھر ، اکنکشا سنگھ اور بومن ایرانی بھی ہیں۔ فلم کی متوقع ریلیزکی تاریخ 29 اپریل 2022 ہے۔اکشے کمارکے بارے میں بات کریں تو وہ ان دنوں’بچن پانڈے‘ کی شوٹنگ میں مصروف ہیں۔ اس فلم میں کریتی سانون اور جیکولین فرنینڈیز کے بھی اہم کردار ہیں۔ فلم 26 جنوری 2022 کو ریلیز ہوگی۔