امت شاہ سے جیتن رام مانجھی کی ملاقات، بہار کی سیاست میں ہلچل

پٹنہ :بہار کے سابق وزیراعلیٰ اور ہم کے سربراہ جیتن رام مانجھی پانچ روزہ دہلی دورے کے بعد آج پٹنہ واپس آگئے ہیں۔ جیتن رام مانجھی اپنے صاحبزادے ریاستی وزیر آب پاشی سنتوش مانجھی کے ہمراہ آج وزیر داخلہ امت شاہ کے رہائش گاہ پر ان سے ملاقات کی۔ ان کی رہائش گاہ پر بی جے پی کے قومی صدر جے پی نڈا اور بی جے پی کے بہار انچارج بھوپندر یادو بھی موجود تھے۔ وزیر داخلہ سے مانجھی کی اس ملاقات کے بعد بہار کی سیاست گرما گئی ہے۔ مانجھی نے کہا ہے کہ ویسے تو وزیر اعظم عہدے کے لیے این ڈی اے میں ویکنسی نہیں ہے مگر نتیش کمار میں ملک کو بہتر طور پر سنبھالنے کی پوری طاقت ہے۔ مانجھی نے ٹوئٹ کر کے کہاہے کہ بہارمیںاین ڈی اے میں کوئی اختلاف نہیں ہے۔ پورا این ڈی اے متحد ہے۔جیتن رام مانجھی کی ملاقات تقریباً ایک گھنٹے ہوئی ، اس موقع پر بہار کے سلگتے مسائل پروزیر داخلہ کا دھیان مبذول کرایا۔ ساتھ ہی انہوں نے جوڈیشری میں دلتوں اور پسماندہ طبقوں کے یزرویشن کا مطالبہ کیا ساتھ ہی انہوں نے پدم شری دشتر تھ مانجھی کو بھارت رتن کی مانگ کے ساتھ ساتھ بہار کے متعدد ترقیاتی منصوبے پر وزیر داخلہ سے باتیں کی اور اس طرف خصوصی توجہ دینے کا مطالبہ کیا۔انہوں نے ٹوئٹرپر وزیراعلیٰ نتیش کمار سے شراب بندی معاملے پر نظر ثانی کی اپیل کی۔ ان کا کہنا ہے کہ بہار میں شراب بندی مکمل ناکام ہے۔ غریب خاص کر دلت طبقے کے لوگ ہزاروں کی تعداد میں جیل میں بند ہیں۔ جبکہ بڑے لوگ ابھی بھی شراب نوشی کررہے ہیں۔ اس معاملے پر وزیراعلی غورو خوض کریں۔