بھارت نے افغانستان میں تعمیری کرداراداکیا ہے: امریکہ

واشنگٹن:بھارت نے ماضی میں افغانستان میں تعمیری کردار ادا کیا ہے جس نے تربیت اور بنیادی ڈھانچے کی بہتری میں مدد فراہم کی ہے ، جس سے جنگ زدہ ملک میں استحکام اور اچھی حکمرانی برقرار رکھنے میں مددملی ہے۔ پینٹاگون ، امریکہ کے ہیڈ کوارٹر محکمہ دفاع نے کہا ہے کہ امریکی وزیر دفاع لائیڈ آسٹن کا کہنا ہے کہ بین الاقوامی برادری افغانستان میں سکیورٹی کی صورتحال کے بارے میں فکرمند ہے جو واضح طور پر صحیح سمت میں نہیں بڑھ رہی ہے۔کربی نے کہاہے کہ بھارت نے ماضی میں تربیت اور دیگر بنیادی ڈھانچے کو بہتر بنانے کے حوالے سے افغانستان میں تعمیری کردار اداکیاہے۔افغانستان کے بارے میں ہندوستان اور امریکہ کے تعاون کے بارے میں پوچھے جانے پرانھوں نے کہاہے کہ اس طرح کے کام ، افغانستان میں استحکام اور اچھی حکمرانی کے لیے اس طرح کی کوششیں ہمیشہ خوش آئندہیں۔بھارت نے افغانستان میں امن اوراستحکام کے قیام میں اہم کردار ادا کیا ہے۔ اس نے جنگ زدہ ملک کی مدد اور تمام سرگرمیوں کی بحالی کے لیے پہلے ہی تقریباََتین ارب امریکی ڈالر کی سرمایہ کاری کی ہے۔ بھارت افغان قیادت والے ، افغانی ملکیت اور افغانوں کے زیر کنٹرول قومی امن اور مفاہمت کے عمل کی حمایت کرتا رہا ہے۔کربی نے پیر کو ایک نیوز کانفرنس کو بتایا کہ امریکی وزیر دفاع لائیڈ آسٹن کا کہنا ہے کہ عالمی برادری افغانستان میں سکیورٹی کی صورت حال کے بارے میں فکر مند ہے ، جو واضح طور پر صحیح سمت میں آگے نہیں بڑھ رہی ہے۔ انہوں نے کہاہے کہ وزیرکاخیال ہے کہ افغان فورسز میں تبدیلی لانے کی صلاحیت ہے۔انہوں نے کہا کہ انہوں نے اس بات کو یقینی بنایا ہے کہ ہم جہاں اور جب ممکن ہو ان کی مدد جاری رکھیں ، وہ یہ بھی سمجھتے ہیں کہ یہ ہمیشہ ممکن نہیں ہے۔ لیکن جہاں تک ممکن ہو ان کی حمایت جاری رکھیں گے ۔