نائب امیر شریعت دستور کے مطابق امیر شریعت کا انتخاب کرواکے انتشار وخلفشار کو دورکریں:اراکینِ شوریٰ

پھلواری شریف:(پریس ریلیز)آج بتاریخ 30اگست شام تین بجے ارکان شوریٰ،اراکین ارباب حل وعقد وبہی خواہان امارت شرعیہکا ایک موقروفدجناب ڈاکٹر احمد عبدالحئی صاحب کی قیادت میں طے شدہ پروگرام کے مطابق حضرت نائب امیر شریعت سے ملاقات کے لیے پہونچا،جب کہ وفد نے کل29اگست کو نائب امیر شریعت سے ملاقات کا وقت مانگا تھا،انہوں نے آج تین بجے سہ پہر کا وقت دیا تھا؛لیکن افسوس کہ وفد سے نائب امیر شریعت نے ملاقات نہیں کی،باربار نائب امیر شریعت کو فون کیا گیا؛لیکن انہوں نے فون کا کوئی جواب نہیں دیا۔قائم مقام ناظم امارت شرعیہ مولانا محمد شبلی القاسمی صاحب نے بھی فون کیا؛لیکن نائب امیر شریعت مولانا شمشاد رحمانی صاحب نے فون ریسیو نہیں کیا،جس سے وفد کے اراکین کو دلی صدمہ ہوا۔آخرکار نائب امیر شریعت مولانا شمشاد رحمانی کا ارکان شوریٰ،علماء کرام اورمعززین شہر کے ساتھ یہ ناروا سلوک کیوں کررہے ہیں؟مولانا شمشاد رحمانی صاحب نائب امیر شریعت ہیں،ان کا یہ سلوک غیر اخلاقی اورغیر شرعی ہے؛کیوں کہ انہوں نے وعدہ کی پاسداری نہیں کی،ایسا محسوس ہوتا ہے نائب امیر شریعت ایک خاص گروپ کے اشارے پر کام کررہے ہیں۔واضح رہے کہ وفد کا مقصد صرف میمورنڈم پیش کرنا تھا،جس میں درج ذیل مطالبات تھے۔’’امارت شرعیہ بہار اڈیشہ وجھارکھنڈ صوبہ ہی نہیں؛بلکہ ملک کا ایک باوقار ادارہ ہے،اس میں امیر شریعت کا عہدہ نہایت ہی اہم اورباوقار ہے۔امیر شریعت سابع مفکر اسلام حضرت مولاناسید محمد ولی رحمانی کے انتقال کے بعد جگہ خالی ہوگئی ہے اوراب تک یہ عہدہ خالی ہے،جس کی وجہ سے امارت شرعیہ کے ممبران شوریٰ،ممبران ارباب حل وعقداوربہی خواہاں امارت شرعیہ کے درمیان یہ موضوع بحث ہے؛اس لیے ہم ممبران شوریٰ ،ارباب حل وعقد اوربہی خواہان امارت شرعیہ کا وفد آپ سے ملاقات کرکے میمورنڈم پیش کرناچاہ رہے تھے کہ آپ جلد از جلد مجلس شوریٰ امارت شرعیہ کی میٹنگ کو یقینی بنائیں؛اس لیے ہم وفد کے شرکاء اوردستخط کنندگان آپ سے التماس کرتے ہیں کہ دو ہفتہ کے اندر ارکان شوریٰ کی میٹنگ مرکزی دفترامارت شرعیہ،پھلواری شریف پٹنہ میں بلائیں اورامارت شرعیہ کے دستور کے مطابق امارت شرعیہ کے امیر شریعت کا انتخاب کراکر پھیلے انتشار وخلفشار کو دورکریں۔امید کہ آپ اس جانب خصوصی توجہ دے کرممنون کریں گے‘‘۔وفد کے اراکین میں ڈاکٹر احمد عبدالحئی،راغب احسن ایڈوکیٹ،حاجی سلام الحق،مولانا ابوالکلام قاسمی شمسی،مولانا محمد عالم قاسمی،نجم الحسن نجمی،اعظمی باری،ایڈوکیٹ انوارعالم،فہیم احمد،تنویر رضوی،فیضان ناصری ،صدرالحق، محسن رضا وغیرہ شامل تھے۔