ایڈووکیٹ راغب احسن نے امیر شریعت سے ملاقات کے بعد اپنا استعفا واپس لیا،کہا،انھوں نے میری غلط فہمیاں دور کردیں

 

پٹنہ: کل امارت شرعیہ کے زیر اہتمام چلنے والے مولانا سجاد میموریل ہسپتال کے چیئر مین ڈاکٹر احمد عبدالحی نے اپنے عہدے سے استعفا دے دیا تھا اور ان کا استعفا نامہ سوشل میڈیا پر بھی وائرل ہوا تھا،جس کے بعد نو منتخب امیر شریعت مولانا احمد ولی فیصل رحمانی نے ان سے ملاقات کی اور بات چیت کے بعد وہ اپنے عہدے پر برقرار رہ کر کام کرنے پر راضی ہوگئے۔ اسی درمیان آج دوپہر سے امارت کے سینئر رکن اور پٹنہ ہائی کورٹ کے وکیل جناب راغب احسن کا استعفانامہ سوشل میڈیا پر گردش کر رہا تھا،جس میں انھوں نے استعفا دینے کی وجہ بھی لکھی تھی۔ اب خود ان کا بیان آیا ہے کہ مغرب بعد امیر شریعت نے ان کے گھر جاکر ان سے ملاقات کی اور ان کی غلط فہمیوں کو دور کردیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ’’ان سے ملاقات کے بعد مجھے احساس ہوا کہ جتنی غلط فہمیاں ان سے متعلق پھیلائی جارہی تھیں، وہ سب غلط اور بے بنیاد تھیں ‘‘۔ انھوں نے اپنا استعفا بھی واپس لے لیا ہے اور حسب سابق امارت کے مفاد میں کام کرنے کا عزم دہرایا ہے۔