عدالت کی بہارحکومت کی سخت سرزنش،نہیں سنبھلتاہے توفوج کی مددلیں

پٹنہ:ہائی کورٹ نے بہارمیں کورونا کی حالت اور اسپتالوں میں آکسیجن کی کمی کے خلاف پی آئی ایل کی سماعت کرتے ہوئے ایک بار پھر بہار حکومت کی سرزنش کی ہے۔ کورونا سے نمٹنے کے حکومتی ڈھلائی کو دیکھتے ہوئے ہائی کورٹ نے آج کہا کہ آپ لوگوں نے عدالت کی کارروائی کا مذاق اڑایا ہے۔عدالت نے کہاہے کہ 15 اپریل سے آرڈر پر حکم دیا جارہا ہے ، لیکن آپ نے اس کا 10 فیصد تک بھی عمل نہیں کیا۔ آج ہمیں اپنے آپ سے شرم آتی ہے کہ ہم آرڈر دیتے رہے اور لوگ مرتے رہے۔ ہم صرف آپ کے اعتمادپر اتنے دن کھو بیٹھے ہیں کہ آپ نے جیسا کہاہم کام کر رہے ہیں۔حکومت کے طبی نظام سے ناراض عدالت نے آج کہاہے کہ اسے فوج سے مدد لینی چاہیے۔ عدالت نے کہاہے کہ آپ نے خود قبول کرلیا ہے کہ پورا نظام منہدم ہوگیا ہے ، لہٰذا ہم پونے میں مسلح افواج کے میڈیکل کالج کے ماہر سے مدد لینے کے بارے میں بھی سوچ سکتے ہیں۔ پیر کو ہائی کورٹ نے حکومت سے منگل تک لاک ڈاؤن پر اپنی رائے دینے کو کہا تھا۔ منگل کو عدالت کی کارروائی کے دوران حکومت نے لاک ڈاؤن نافذ کرنے کا فیصلہ کیا۔حکومت نے عدالت کو بتایاہے کہ 15 مئی تک پوری ریاست میں لاک ڈاؤن نافذ کردیا گیا ہے۔