30؍ستمبر تک کسی قسم کے مظاہرے ،عوامی اجلاس کی اجازت نہیں:دہلی پولیس

نئی دہلی:دہلی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (ڈی ڈی ایم اے) کے حکم کا حوالہ دیتے ہوئے دہلی پولیس نے کہا کہ کووڈ 19 کے پیش نظر لوگوں کو 30 ستمبر تک شہر میں احتجاجی مظاہرہ کرنے کی اجازت نہیں دی جاسکتی ہے۔ شہر میں زرعی بلوں کے خلاف مظاہروں کے درمیان دہلی پولیس نے لوگوں کو یہ بتاتے ہوئے متعدد ٹوئٹس کئے کہ ڈی ڈی ایم اے کے 3 ستمبر کے حکم نامے سے شہر میں ایسی سرگرمیاں ممنوع ہیں۔ دہلی پولیس نے ٹویٹ کیا کہ عام لوگوں کو آگاہ کیا گیا ہے کہ ڈی ڈی ایم اے کے 3 ستمبر کے حکم کے پیش نظر، قومی دارالحکومت دہلی میں ممنوعہ سرگرمیوں پر 30 ستمبر تک برقرار رکھنے کی ضرورت ہے۔ اس میں کہا گیا ہے کہ دہلی کے قومی دارالحکومت علاقہ میں، ایسی صورتحال میں ہجوم کے ساتھ ہونے والے تمام سیاسی، ثقافتی اور سماجی پروگراموں پر 30 ستمبر 2020 تک پابندی ہوگی۔ دہلی کانگریس کے لیڈران اور کارکنوں نے نئے زرعی بلوں کے خلاف احتجاج کے لئے پیر کو پارلیمنٹ ہاوس کی طرف مارچ کیاتھا۔ پارٹی نے کہا کہ مظاہرین پارلیمنٹ ہاوس کی طرف جارہے تھے لیکن پولیس نے انہیں آر پی روڈ پر روک لیا اور انہیں تحویل میں لے لیا۔