جماعت اسلامی ہند شہر لکھنؤ کا مسلسل 25؍ دنوں سے راحت رسانی کا کام جاری،روزانہ 600؍ افراد تک پہنچائی جارہی ہے فوڈ کٹ

لکھنؤ : جماعت اسلامی ہند شہر لکھنؤ کی جانب سے کورونا وبا کے درمیان لوگوں کے درمیان راحت رسانی کا کام مستقل 25؍ دنوں سے جاری ہے۔ وبا کے درمیان بہت سے لوگوں کے وزگار چھوٹنے کی وجہ سے پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ دوسرے اضلاع سے علاج کرانے کے لیے شہر آنے والے مریضوں اور تیمارداروں کے سامنے بھی کھانے پینے کا بڑا مسئلہ ہے، کیونکہ شہر میں سبھی ریسٹورنٹ اور کھانے پینے کے ہوٹل بند ہیں۔ اس دوران جماعت اسلامی ہند شہر لکھنؤ کی ٹیم گذشتہ 25؍ دنوں سے مسلسل شہر کے مختلف علاقوں میں لوگوں کو کھانے پینے کی چیزیں فراہم کر رہی ہے۔16؍ افراد پر مشتمل والنٹیئرس کی ٹیم جماعت اسلامی ہند یوپی مشرق کے معاون سکریٹری محمد صابر خان کی نگرانی میں راحت رسانی کا کام کر رہی ہے۔ محمد صابر خان نے بتایا کہ والنٹیئرس کی ٹیم کے جی ایم سی، لوہیا اسپتال، سول اسپتال، حضرت گنج، برلنگٹن چوراہا، لال باغ، امین آباد اور مولوی گنج وغیرہ میں راہگیروں، ضرورتمندوں اور اسپتالوں میں موجود تیمارداروں کے لیے کھانے پینے کا انتظام کر رہی ہے۔ ٹیم کے ذریعہ روزانہ 600؍ فوڈ کٹ تقسیم کئے جا رہے ہیں، اس حساب سے اب تک 25؍ دنوں میں 15000؍ فوڈ کٹ تقسیم کر دیے گئے اور یہ سلسلہ آگے بھی جاری رہے گا۔صابر خان نے کہا کہ شہر میں بہت سے لوگوں کا روزگار لاک ڈاؤن کی وجہ سے ختم ہو گیا ہے، اس لئے ان کے گھروں پر راش وغیرہ کا بھی انتظام جماعت اسلامی ہند کر رہی ہے۔ فوڈ کٹ کے علاوہ لوگوں کے گھروں پر اور سلم بستیوں میں راشن کٹ بھی پہونچایا جا رہا ہے۔والینٹئرس کی ٹیم میں بالخصوص امیر مقامی اندرا نگر حبیب احمد، محمد عامر خان، محمد فیضان، کامران، فیصل خان، ٹیپو، حافظ اخلاق، اظہار الحق، شاہد علی، نجمی خان، عرشیان، توفیق احمد، جنید، ریاض احمد وغیرہ کے نام قابل ذکر ہیں۔