۱۲؍ستمبر کوبزمِ صدف کی کویت شاخ کا عالمی آن لائن مشاعرہ

کویت شاخ کے افتتاحی پروگرام میں محمد صبیح بخاری ، پروفیسر ارتضیٰ کریم، شہاب الدین احمد اور صفدر امام قادری کی خصوصی شرکت ہوگی
پٹنہ:(پریس ریلیز)اردو زبان و ادب کی ہمہ جہت کاوشوں کے لیے سرگرم بزمِ صدف انٹرنیشنل تنظیم کی تاریخ میں آیندہ سنیچر ۱۲؍ستمبر ۲۰۲۰ء کو ایک نئے باب کا آغاز ہوگا جب خلیجی ملک کویت میں بزمِ صدف کی شاخ کا تاسیسی پروگرام انجام کو پہنچے گا۔ اس سلسلے سے منعقدہ افتتاحی پروگرام سے بزمِ صدف کے سرپرستِ اعلا جناب محمد صبیح بخاری (قطر) ، شعبۂ اردو دلی یونی ورسٹی کے صدر پروفیسر ارتضیٰ کریم، بزمِ صدف کے چیئرمین جناب شہاب الدین احمداور بزمِ صدف کے ڈائرکٹر صفدر امام قادری خطاب کریں گے۔ مہمانِ اعزازی کے طور پر جناب احمد اشفاق(قطر)، ڈاکٹر محمد گوہر(چیف ایڈیٹر روزنامہ تاثیر) اور سینئر صحافی یواین آئی جناب عابد انور شریکِ بزم ہوںگے۔
بزمِ صدف کے ڈائرکٹر پروفیسر صفدر امام قادری نے بتایا کہ گذشتہ برسوں میں متعدد مواقع سے کویت میں مقیم اردو زبان و ادب سے متعلق سرگرم شخصیات سے اس شاخ کے قیام کے سلسلے سے تبادلۂ خیالات کا سلسلہ رہا۔ بالخصوص چیئرمین شہاب الدین احمد اور پروگرام ڈائرکٹر احمد اشفاق نے بزمِ صدف کی کویت ٹیم کے ارکان کو پہچاننے کی کوشش کی اور مختلف مراحل کے تبادلۂ خیالات اور غور و خوض کے بعد مشہور شاعر مسعود حساس کی صدارت میں کویت کی کمیٹی نے اپنی حتمی شکل اختیا رکی۔ جناب صابر عمر جنرل سکریٹری منتخب ہوئے اور دیگر عہدے داران میں نسیم زاہد، اظہار التسنیم، ایوب خان نیزہ اور ابراہیم سنگ قاصد شامل ہوئے۔ کویت کی بزمِ صدف کو اس بات کے لیے داد دی جائے گی کہ ملک میں مقیم تمام اہم بزرگ اہلِ قلم اور اصحاب الراے لوگوں کو بزمِ سرپرستان میں شامل کرنے میں کامیابی ملی۔ جناب مرزا عمیر بیگ، محترمہ شاہ جہاں جعفری حجاب، جنا ب عامر قدوائی، جناب رانا اعجازاور جناب جعفر صمدانی بزمِ صدف کی کویت شاخ کے سرپرست بنائے گئے ہیں۔
بزمِ صدف کویت شاخ کی تاسیس کے موقعے سے ایک آن لائن عالمی مشاعرے کا پروگرام بھی مرتب کیا گیا ہے۔ گذشتہ دنوں بزمِ صدف نے ۱۵؍اگست کی رات میں جناب باصر سلطان کاظمی کی صدارت میں ایک عالمی مشاعرہ منعقد کیا تھا اور اس بات کا وہاں اعلان ہوا تھا کہ عام طور پر مہینے میں ایک بار وبائی دنوں میں وقت کے جمود اور خوف کو توڑنے کی غرض سے ایک ادبی پروگرام، مشاعرہ یا کوئی خصوصی خطاب منعقد کیا جائے گا۔ اسی سلسلے سے کویت شاخ کی تاسیس کے موقعے سے ایک عالمی مشاعرہ منعقد کیا جارہا ہے جس کی صدارت بنگلہ دیش کے مشہور شاعر اور ـ’کہکشاں ‘مجموعے کے خالق جناب جلال عظیم آبادی کررہے ہیں۔
اس عالمی مشاعرے میں ہندستان ، پاکستان ، جرمنی، برطانیہ ، قطر، کینیڈا، دوبئی، کویت اور بنگلہ دیش جیسے ممالک کے منتخب شعرا شامل کیے گئے ہیں۔ مشاعروں میں اپنے منتخب اشعار پڑھنے کی وجہ سے پاکستان کے عباس تابش کی ایک خاص شناخت ہے۔ اسی طرح کینیڈا میں مقیم جناب ضامن جعفری کی ظریفانہ شاعری کا ایک عالم شیدا ہے۔ جناب پرویز مظفر(برطانیہ) اور جناب انور ظہیر رہبر(جرمنی) کی شمولیت سے یورپ کی شاعری کا تازہ ذائقہ ہمیں میسر آئے گا۔ دوبئی میں مقیم بزمِ صدف نئی نسل ایوارڈ یافتہ شاعرہ ڈاکٹر ثروت زہرا اور سعودی عرب میں بود و باش اختیار کرنے والے جناب عادل مظفرپوری مشاعرے میں اپنی شاعری سے لوگوں کی توجہ حاصل کرنے میں کامیاب ہوںگے۔ ’دسترس‘ شعری مجموعے کے خالق جناب احمد اشفاق اور ڈاکٹر ندیم ظفر جیلانی دانش قطر کی نمایندگی کریںگے۔ ہندستان سے ڈاکٹر ظفر امام قادری جو ’احساس کی ہجرت‘ اور ’سارا منظر ڈوب جاتا ہے‘ جیسے مجموعوں کے خالق ہیں ، ان کی شمولیت ایک خاص حیثیت کی حامل ہے۔ مشاعرے کی نظامت کویت شاخ کے صدر مسعود حساس کریں گے۔ اس آن لائن پروگرام کو روزنامہ تاثیر اور ہفتہ وار مسرت ،نئی دہلی کا خصوصی تعاون حاصل ہے۔ مشاعرہ ’زوم ایپ‘اور بزمِ صدف کے فیس بک پر لائیو ہوگا۔ ہندستانی وقت کے مطابق ۱۲؍ستمبر کو ساڑھے آٹھ بجے رات سے اسے سنا اور دیکھا جاسکے گا۔بزمِ صدف کے ڈائرکٹر صفدر امام قادری نے اخبار کی اطلاع کو اصحابِ فکر و نظر کی خدمت میںمودبانہ دعوت نامے کے بہ طور پیش کرتے ہوئے گزارش کی ہے کہ وبا کی الجھنوں کے حصار سے نکلنے کے لیے اس خوب صورت اور منتخب پروگرام میں شامل ہوکر بزمِ صدف کی اس نئی شاخ کے اہالیان کا حوصلہ بڑھائیں اور اپنی زبان کے نئے اور معتبر چہروں اور ان کے نمایندہ کلام کو دیکھنے اور سننے کا موقع حاصل کریں۔