نعت

افتخاررحمانی فاخرؔ

اللہ کی پہچان ہے ، عرفان ہے تیری جبیں
تکوین کی ، حسنِ جہاں کی شان ہے تیری جبیں

اے زینت ِ لوح وقلم، اے وجہِ تخلیق ِ جہاں
اعجازِ حق ، آئینۂ قرآن ہے، تیری جبیں

چھائی تھی جو اک تیرگی ، اُس تیرگی کے واسطے
اک صبح عالم تاب کا اعلان ہے تیری جبیں

میرے لیے ترکِ بتاں، اعزاز ہے اے مصطفی!
کفر و یقیں کی جنگ میں، میزان ہے تیری جبیں

دیکھا تجھے جو اک جھلک ، تیرا وہ دیوانہ ہوا
واللہ! بے شک منبعِ ایقان ہے تیری جبیں

بدرالدجیٰ چہرہ ترا ، زلفیں تری ہیں والضحیٰ
طاقِ حرم میں روشنی کی جان ہے، تیری جبیں

اُس طور سینا پر تجلی جو ہوئی تھی ناگہاں
یاں مظہرِ صد جلوۂ یزدان ہے تیری جبیں

  • افتخاررحمانی فاخرؔ
    18 جولائی, 2019 at 16:17

    قندیل ٹیم کا شکریہ ! قندیل نے میری ٹوٹی پھوٹی نعت کو اپنی سائٹ کے قابل سمجھا اور اس کو شائع کیا ۔ جزاک اللہ خیراً فاحسن الجزاء ۔

Leave Your Comment

Your email address will not be published.*