Home غزل غزل

غزل

by قندیل

عمار اقبال

جو بچی ہے گزار دوں ؟ اچھا!
زندگی تجھ پہ وار دوں ؟ اچھا!
اور تو کچھ نہیں ہے میرے پاس
خواب ہیں،مستعار دوں؟ اچھا!
آزما لوں تجھے وفا پیکر
تجھ کو راہِ فرار دوں؟ اچھا!
صبر کو تقویت ملے گی کیا؟
جبر کو اختیار دوں ؟ اچھا!
تم سنو اور ان سنی کر دو
میں صدا بار بار دوں؟ اچھا!

You may also like

Leave a Comment