شہریت ختم کرنے کے سنگین نتائج برآمد ہوں گے:مایاوتی

لکھنؤ:31جولائی(قندیل نیوز)
بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی)کی صدر مایا وتی نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) پر تقسیم کرنے کی سیاست کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ اس نے آسام ریاست میں برسوں سے آباد مذہبی اور لسانی اقلیتوں کی شہریت ختم کرکے نیا مسئلہ پیدا کردیا ہے جس کے سنگین نتائج بھگتنے پڑسکتے ہیں۔محترمہ مایاوتی نے منگل کے روز یہاں جاری بیان میں کہا کہ نیشنل رجسٹر آف سٹیزنس(این آر سی)کی پیر کے روز شائع ہوئی رپورٹ کے مطابق ریاست آسام میں برسوں سے آباد 40لاکھ سے زائدمذہبی اور لسانی اقلیتوں کی شہریت ختم کردی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سے نیا مسئلہ پیدا ہوگا۔ اس سلسلے میں اپنے سیاسی مفادکے لیے مرکزاورآسام سرکارنے تنگ ذہنیت کا ثبوت دیا ہے۔انہوں نے اس معاملے میں مرکزی سرکارسے فوری طور پر کل جماعتی میٹنگ طلب کرکے ضروری اور مؤثر کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔