جماعت اسلامی دہلی کے ذمہ داروں کابیگم پور مدرسہ کادورہ

نئی دہلی: 30اکتوبر(پریس ریلیز)
جماعت اسلامی ہند حلقہ دہلی کا وفدآج صبح مالویہ نگربیگم پورمدرسہ میں جہاں دوروزقبل ایک ننھے آٹھ سالہ طالب علم کوشہیدکریاگیا مفتی سہیل احمدقاسمی سکریٹری اسلامی معاشرہ دہلی وہریانہ کی قیادت میں مدرسہ کے مہتمم مولانامحمدعلی جوہراوروہاں کے اساتذہ اوربیگم پورکے ذمہ داروں سے ملاقات اورمیٹنگ کی۔حالات کاجائزہ لینے کے بعدہرممکن تعاون کایقین دلایامزیدکیس کے تعلق سے جماعت اسلامی کےA,P,C,Rکے ذمہ دارایڈوکیٹ جناب محمدانورخان صاحب سے گفتگوکروائی اورایڈوکیٹ نے کہاکہ مجھ سے جس طرح کاتعاون چاہئے حاضرہوں اورپوراکیس بھی لڑنے کیلئے تیارہوں۔ واضح ہوکہ جماعت اسلامی یہ خدمات مفت انجام دیتی ہے اسکے بعدبیگم پورتھانہ میں جاکر,S,H,O,سے ملاقات کی اورقانونی کارروائی کے بار ے میں جانکاری حاصل کی اور مجرموں کوکیفردارتک پہونچانے کے معاملہ میں تفصیل سے گفتگوکی ۔انہوں نے کہا کہ شرپسندعناصرکوجب تک سزانہیں ہوگی اورہمارے بچے کوانصافنہیں ملے گاہم سکون سے نہیں بیٹھیں گے بلکہ ان لوگوں کی فوری گرفتاری کامطالبہ بھی کیاجنھوں نے اکساکرمعصوم بچے کوشہیدکروادیا،وہ شرپسندابھی تک کھلے عام گھوم رہیں ہیں ابھی تک چارلڑکوں کی گرفتاری عمل میں آئی ہے جنہوں نے پیٹ پیٹ کرنننھے محمدعظیم کوشہیدکردیا ,وفدمیں شامل عمردرازامیرمقامی وکاس نگر,چاندمیاں رگھوویرنگر,حاجی منورحسین انصاری سلطانپوری اورمجاہدالاسلام روھنی وغیرہ تھے۔